ریسکیو1122 نے ماہ جون2017 میں 3602ایمرجنسیزپرریسپانس کرکے 4079 لوگوں کو ریسکیوکیا،ماہانہ اجلاس

ملتان(ملتان اپڈیٹس)۔سینٹرل اسٹیشن ریسکیو 1122چوک کمہارانوالہ ملتان کانفرنس روم میں ماہانہ کارکردگی جائزہ اجلاس ہوا.جسکی صدارت ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسرریسکیو1122ڈاکٹرکلیم اللہ نے کی جس میں ایمرجنسی آفیسرز ڈاکٹرخالد محمود‘ انجینئراحمد کمال ‘کنٹرول روم انچارج محمد مدثرضیاء‘ ریسکیواینڈ سیفٹی آفیسر محمد امتیاز و محمد آفتاب ریسکیو1122ملتان کے تمام اسٹشین انچارجز چوک کمہارانوالہ سے محمد امجد ‘ کلمہ چوک سے محمد عثمان ‘ بہاولپوربائی پاس چوک حامد محمود‘ انڈسٹریل اسٹیٹ ریسکیو اسٹیشن سے نعیم عمران ارشاد وہاڑی روڈ سے محمد طارق سندیلہ شریک تھے۔ ریسکیو کی کارکردگی بارے جائزہ کے دوران انہیں بتایاگیاکہ ریسکیو1122ملتان نے جون2017 میں 3602ایمرجنسیزپرریسپانس کرکے 4079متاثرین کو ریسکیوکیا۔ریسکیو1122ملتان کا اوسطاً ریسپانس ٹائم 7 منٹ رہا ۔ ریسکیو1122ملتان نے ماہ جون میں1328ٹریفک حادثات‘93آگ لگنے کے واقعات‘ 88 لڑائی جھگڑے (کرائم)کی04،ڈوب جانے کی،14عمارتوں کے گرنے کی اور 01دھماکہ کی ایمرجنسیز‘ اور1773میڈیکل ایمرجنسیز جن میں دل کا دورہ‘ سانس کے مریض‘گانئی وغیرہ کے مریض شامل ہیں کو ریلیف فراہم کیا ان تمام3602ایمرجنسیز میں4079 متا ثرین کوہسپتال میں منتقل کیا۔856کوموقع پر ابتدائی طبی امداد دے کرفارغ کردیاگیا۔جبکہ تمام مختلف ایمرجنسیزمیں124متاثرین جانبرنہ ہوسکے اورموقع پرہلاک پائے گئے۔
پنجاب ایمرجنسی سروس ریسکیو1122ملتان کے ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ڈاکٹرکلیم اللہ نے کہا کہہماری ترجیح شہریوں کی بھلائی ہے اورجس کے لیے ضروری ہے کہ کسی بھی ایمر جنسی کال پر بروقت ریسپانس کریں اور شہریوں کو ریلیف فراہم کریں۔دوسراانہوں نے شہریوں سے بھی اپیل کی ہے کہ ماہ جون میں77080کالزموصول ہوئیں جن میں صرف3602 ایمر جنسی کالز تھیں اس لیے تمام شہری ذمہ داری کا ثبوت دیں اور صرف ایمر جنسی کی صورت میں ہی 1122ڈائل کریں اور غیرضروری طور پراس یمر جنسی نمبرمصروف نہ کریں۔
ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ڈاکٹر کلیم اللہ نے عوام سے اپیل کی ہے کہ آگ لگنے کے واقعات کی بڑھتی ہوئی تعداد خطرے کی گھنٹی ہے اور اس سلسلے میں لوگوں کو چاہیے کہ فائر سیفٹی پر عمل کریں اور اپنے دفاتر،گھروں،دکانوں اور کارخانوں میں فائرسیفٹی کے آلات نصب کرائیں تاکہ کسی بھی بڑی ایمرجنسی سے بچاجاسکے۔

شئیر کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں