ملتان الیکٹرک پاورکمپنی (میپکو) کا صارفین کو زیادہ سے زیادہ بجلی فراہم کرنے اور حکومتی پالیسی پر عملدرآمد کرتے ہوئے نجی شعبے سے بجلی خریدنے کا فیصلہ

ملتان(ملتان اپڈیٹس)ملتان الیکٹرک پاورکمپنی (میپکو) نے ریجن بھر کے صارفین کو زیادہ سے زیادہ بجلی فراہم کرنے اور حکومتی پالیسی پر عملدرآمد کرتے ہوئے نجی شعبے سے بجلی خریدنے کا فیصلہ کیاہے ۔ میپکو بورڈ آف ڈائریکٹرز کی منظوری سے جنوبی پنجاب کے مختلف اضلاع میں سورج کی روشنی (سولر) اور گنے کے پھوک ( بیگاس ) سے پیدا ہونے والی 442میگاواٹ بجلی خریدی جائے گی ۔ نیپرا کے منظور شدہ ٹیرف کے مطابق سولر سے پیداہونے والی 140میگاواٹ اور بیگاس سے پیدا ہونے والی302میگاواٹ بجلی خرید کر قومی سسٹم میں شامل کی جائے گی ۔ میسرز لعل پیر سولر (پرائیویٹ )لمیٹڈ کوٹ ادو سے 10میگاواٹ ، میسرز ایشیاء پٹرولیم نورسر بہاولپور سے 30میگاواٹ، میسرز زینفاسولر چوبارہ لیہ سے 100میگاواٹ، میسرز بہاولپور انرجی لمیٹڈ اشرف آباد بہاولپور سے 31.20میگاواٹ، میسرز اتفاق پاور لمیٹڈ چنی گوٹھ بہاولپور سے31.20میگاواٹ، میسرز حمزہ شوگر ملز فیز جیٹھا بھٹہ خانپور سے30میگاواٹ، میسرز آر وائی کے انرجی لمیٹڈ رکن آباد رحیم یار خان سے 25میگاواٹ، میسرز صادق آباد پاور لمیٹڈ ماچھی گوٹھ رحیم یار خان سے 45میگاواٹ، میسرز انڈس انرجی لمیٹڈ راجن پور سے 30میگاواٹ، میسرز شیخو پاورلمیٹڈ انوارآباد مظفرگڑھ سے 30میگاواٹ اور تھل انڈسٹریز پرائیویٹ لمیٹڈ (لیہ شوگر ملز) سے 20میگاواٹ بجلی خریدی جائے گی ۔ میپکو بورڈ آف ڈائریکٹرز نے چیف ایگزیکٹو آفیسر میپکو کو مذکورہ فرموں /کمپنیوں سے بجلی خریداری کے معاہدے کرنیکا اختیار بھی دیدیاہے ۔

شئیر کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں