مرکزی جمعیت اہلحدیث پاکستان کے مرکزی قائم مقام امیر علی ابو تراب کا کوئٹہ سے اغواء،مرکزی وصوبائی قیادت کا شدید ردعمل کا اظہار،24 گھنٹے کے اند ر مولانا علی محمد ابو تراب کو بازیاب نہ کرایا گیا تو ملک گیر احتجاج کر ینگے، حافظ فیصل افضل شیخ ،محمد عبداللہ، نعیم بلوچ ودیگر

ملتان….. مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان ، اہلحدیث یوتھ فورس پاکستان کے مرکزی ، صوبائی، مقامی رہنماوں نے مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان کے قائم مقام امیر وامیر صوبہ بلوچستان مولانا علی محمد ابوتراب کے کوئٹہ سے اغوا پر اپنے شدید ردعمل کا اظہا کیا ہے۔اور انکی جلد بازیابی کا مطالبہ کیا ہے۔ اہل حدیث یوتھ فورس پاکستان کے مرکزی صدر حافظ فیصل افضل شیخ ، جنرل سیکرٹری محمد عامر صدیقی ، صدر جنوبی پنجاب ضیاء الحق جانباز، جنرل سیکرٹری قاری ہدایت اللہ رحمانی، مرکزی جمعیت اہل حدیث کے ضلعی ناظم علامہ عنایت اللہ رحمانی،ڈاکٹر عبدالکریم، قاری عطاللہ عزیز ، عبدالحمید عابد، عبدالحئی اثری ، محمد عبداللہ، طاہر محمود، نعیم بلوچ نے کہا ہے کہ 24 گھنٹے کے اند ر مولانا علی محمد ابو تراب کو بازیاب نہ کرایا گیا تو ملک گیر احتجاج کر ینگے۔قائم مقام امیر مولانا ابو تراب کا اغوا پوری مرکزی جمعیت اہل حدیث کے اغوا کے مترادف ہے۔حکومت علما کو تحفظ فراہم کرنے میں ناکام ہوچکی ہے۔ہم انکی بازیابی کا مطالبہ کرتے ہیں اس ضمن میں ہمارے ملک کے با اعتماد سیکیورٹی ادارے بھی انکی بازیابی میں کردار ادا کریں۔ملزمان کو جلد از جلد گرفتار اور مولانا علی محمد ابو تراب کو بازیاب کیا جائے۔ہم پر امن لوگ ہیں مگر اسے ہماری کمزوری نہ سمجھا جائے۔وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال فی الفور بازیاب کرائیں ورنہ اسلام آباد میں لانگ مارچ کرینگے۔

شئیر کریں