نوجوانوں کو ادب سے وابستہ کرنے کے لیئے پاکستان رائٹرز ونگ کی کاوشیں قابل تحسین ہیں، پروفیسر ڈاکٹر امتیاز بلوچ

ملتان…..ممتاز ماہر تعلیم، ادیب، نقاد ، شاعر پروفیسر ڈاکٹر امتیاز بلوچ نے کہا ہے کہ عصر حاضر میں تعلیم کے بغیر ہم ترقی کا خواب بھی نہیں دیکھ سکتے۔نسل نو کو جدید علوم وفنون سے آشنا ئی ضرور حاصل کرنا چاہیئے۔آج تعلیم کے ساتھ تربیت کی اشد ضرورت ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے پاکستان رائٹرز ونگ کی طرف سے اپنی تعلیمی خدمات کے اعتراف پرملنے والے تعریف خدمات ایوارڈ قاری محمد عبداللہ سے وصول کرتے ہوئے کیا۔انہیں یہ ایوارڈ ماہر تعلیم مرزا محمد یسین بیگ کی ہدایت پر محمد عبداللہ نے پیش کیا۔ڈاکتر پروفیسر امتیاز بلوچ کا مزید کہنا تھا کہ نوجوانوں کو ادب سے وابستہ کرنے کے لیئے پاکستان رائٹرز ونگ کی کاوشیں قابل تحسین ہیں۔ نوجوانوں کو قلم وقرطاس سے وابستہ رہنا چاہیئے۔ نوجوانوں کو کتاب، ادب سے وابستہ کرنا پاکستان رائٹرز ونگ کا قابل ستائش اقدام ہے۔ اس موقع پر محمد عبداللہ صدر پاکستان رائٹرز ونگ نے کہا کہ لوگوں کو علم سے وابستہ رکھنے کی کاوشیں ملک کا مستقبل سنوارنے کے مترادف ہے۔تعلیم کے حصول کے لیئے طلبا وطالبات کی رہنمائی ، حوصلہ افزائی کرنے والے بہت قلیل لوگ ہیں اور ایسے ماہرین تعلیم ملک وقوم کا اثاثہ ہیں۔ پروفیسر امتیاز بلوچ خطے کا اثاثہ ہیں ہم انکی کا وشوں کو قدر کی نگاہ سے دیکھتے اور سراہتے ہیں۔

شئیر کریں